سانحہ کراچی، جاں بحق افراد کی تعداد 97 ہو گئی، 2 مسافر معجزانہ طور پر محفوظ

پی آئی اےکا جاں بحق افراد کی تدفین کیلئے فی کس 10 لاکھ دینے کا اعلان

کراچی : (پاکستان فوکس آن لائن) گذشتہ روز حادثے کا شکار ہونے والی پی آئی اے کی پرواز پی کے 8303 کےجائے حادثہ سے97 لاشیں نکال لی گئیں جبکہ 2مسافرمعجزاتی طور پر محفوظ رہے۔پی آئی اے کی پرواز پی کے 8303 نے گذشتہ روز دوپہر ایک بج کر10 منٹ پر علامہ اقبال ایئرپورٹ سے اڑان بھری،ڈیڑھ گھنٹے بعد طیارہ کراچی ایئرپورٹ کے رن وے سے محض دو کلومیٹر دور تھا جب اس کا دوسرا انجن بھی بند ہو گیا۔ایئرٹریفک کنٹرول نے پائلٹ کو رن وے کلیئرنس کا پیغام دیا۔ لیکن اسی دوران طیارے کا لینڈنگ گیئر بھی خراب ہو گیا۔ پائلٹ نے پرواز کو بائیں جانب موڑنے کی کوشش کی لیکن اسے مہلت نہ ملی اور ائیرپورٹ رن وے سے صرف دس سیکنڈ کی مسافت پر طیارہ جناح گارڈن کے رہائشی علاقے کی بلند عمارت سے ٹکرا کر تباہ ہو گیا۔ طیارے میں 99 مسافر اور کیپٹن سجاد گل سمیت عملے کے 8 ارکان موجود تھے۔
آئی ایس پی آر کے مطابق جائے حادثہ سے 97لاشیں نکال لی گئیں ہیں جبکہ 2مسافر محفوظ رہے، 25 متاثرہ گھروں کوکلیر کر دیا گیا ہے اور متاثرہ گھروں کے رہائشیوں کومختلف جگہوں پرمنتقل کردیا گیا ہے جبکہ ریسکیوآپریشن بدستور جاری ہے۔
یاد رہے کہ طیارہ گرنے سے تین مکان مکمل تباہ ہو گئے تھے جبکہ آگ بھڑکنے سے کئی مکانوں کو شدید نقصان پہنچا۔ بدقسمت طیارے کا بلیک باکس بھی مل چکا ہے۔دوسری جانب ایوی ایشن ڈویژن نے حادثے کی تحقیقات کیلئے نوٹیفکیشن جاری کردیا جس کے مطابق تحقیقاتی ٹیم کی سربراہی ائیر کموڈور محمد عثمان غنی کریں گے۔ونگ کمانڈر ملک عمران، گروپ کیپٹن توقیر اور جوائنٹ ڈائریکٹر اے ٹی سی ناصر مجید ٹیم میں شامل ہیں۔ حادثے کی جامع رپورٹ ایک ماہ کے اندر مکمل کرکے دی جائے گی ۔واضح رہے کہ طیارہ حادثے کی ابتدائی رپورٹ میں بتایا گیا کہ لینڈنگ گیئرخراب ہونے کے بعد پائلٹ طیارے کو قواعد کے مطابق لینڈنگ کیلئے نیچے لائے، اس دوران بدقسمت طیارے سے ایک سے زیادہ پرندے ٹکرا گئے،طیارے کے دونوں انجن جزوی طور پر بند ہوگئے،انجنون سے کم طاقت ملنے کے سبب جہاز کی بلندی انتہائی کم ہوتی گئی،کچھ ہی دیر میں جہاز اپنی بلندی برقرار نہ رکھ سکا۔
دوسری جانب قومی ائیرلائن پی آئی اے نے طیارہ حادثے میں جاں بحق ہونے والے افراد کی تدفین کے لیے فی کس 10 لاکھ روپے دینے کا اعلان کیا ہے۔ترجمان پی آئی اے عبداللہ خان کے مطابق طیارے میں شہید ہونے والوں کے جسد خاکی لواحقین کے حوالے کرنے کا عمل جاری ہے اور لواحقین کو تدفین کے لیے پی آئی اے کے قوانین کے مطابق 5 لاکھ روپے ادا کیے جاتے ہیں۔ترجمان نےکہا کہ وزیر اعظم پاکستان کی خصوصی ہدایت پر تدفین کےلیےفی کس 10 لاکھ روپے ادا کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جب کہ تدفین کے اخراجات پی آئی اے کے ڈسٹرکٹ مینیجرز خود لواحقین کے گھر جا کے ادا کریں گے۔ترجمان پی آئی اے کا کہنا تھا کہ جائے حادثہ سے تمام لاشیں نکال لی گئی ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ روز قومی ائیرلائن کی پرواز کو پیش آنےوالےحادثےکے نتیجے میں جہاز کے عملے سمیت 97 افراد جاں بحق ہوگئے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *