پینسٹھ کی جنگ کے ہیرو ایم ایم عالم کا یوم پیدائش

اسلام آباد: (ویب ڈیسک)انیس سو پینسٹھ کی جنگ میں ایک منٹ سے بھی کم وقت میں بھارت کے پانچ لڑاکا جہازوں کو زمین بوس کرنے والے ایم ایم عالم کا84واں یوم پیدائش آج منایاجارہاہے۔بھارتی فضائیہ کے طیاروں پر عقاب کی مانند جھپٹنے اور تباہ کرنے والے ایم ایم عالم کے کارنامے زبان زدعام ہیں۔انیس سو پینسٹھ کی جنگ میں بھارت کے خودساختہ سورماؤں سے ایم ایم عالم کا ٹاکرا مقبوضہ کشمیر کے چھمب جوڑیا ں اور آدم پور جالندھر میں ہوا۔ان ہوائی معرکوں میں کچھ واقعات جنگی تاریخ کا حصہ بن گئے ہیں۔ ایک منٹ سے بھی کم وقت میں بھارت کے پانچ لڑاکا جہازوں کو زمین بوس کردینے والے ایم ایم عالم کا کارنامہ آج بھی سننے والو ں کو ورطہ حیرت میں مبتلا کردیتاہے۔ایم ایم عالم کی منہ بولی بیٹی خدیجہ محمود کا ماننا ہے کہ پینسٹھ کی جنگ کے غازی ایم ایم عالم ایک مجاہد کی جیتی جاگتی تصویر تھے اور پاکستان سے ان کی محبت جنون کی حد تک تھی ۔اپنے پسندیدہ جنگی ہوائی جہاز ایف ایٹی سکس کے ذریعے انہونی کو ہونی کردینے والےایم ایم عالم کو غیر معمولی جنگی ہوائی مہارتوں کی وجہ سے فالکن ،لٹل ڈریگن جیسے القابات سے بھی نوازاگیا ۔

ایم ایم عالم نے پینسٹھ کی جنگ میں مختلف محاذوں پر کل گیارہ بھارتی طیاروں کو تباہ کر کے ریکارڈ قائم کیا۔ایم ایم عالم کو شاندار کارکردگی دکھانے پروطن عزیز کے تیسرے بڑے فوجی اعزاز ستارہ جرات سے نوازا گیا۔6 جولائی 1935 کو برصغیر کے شہر کلکتہ میں پیدا ہونے والے ایم ایم عالم نے 1952 میں پاکستان ائیر فورس میں کمیشن حاصل کیا۔ایم ایم عالم 1982 میں ائیر کموڈور کے عہدے پر ریٹائرڈ ہوئے اور 18 مارچ 2013 کو 78 برس کی عمر میں دنیا کو خیرباد کہہ گئے۔پینسٹھ کے جنگ کے ہیرو ایم ایم عالم کے زیر استعمال جنگی جہاز ایف 86 کو لاہور کے مال روڈ پر بطور یادگار نصب کیا گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *