نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا فیصلہ

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن) حکومت نے نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا فیصلہ کرلیا، نام ای سی ایل سے نکالنے کیلئے وفاقی کابینہ کو خط لکھا جائے گا، کابینہ سے منظوری کے بعد نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالا جائے گا۔
حکومت نے سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے تاحیات قائد نواز شریف کی ای سی ایل کی درخواست پر فوری عمل درآمد کا فیصلہ کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نکلوانے کے لیے حکومت کو درخواست دے دی گئی ہے، نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے نکلوانے کے لیے شہباز شریف نے وکلا سے مشاورت کا آغاز کیا جس کے بعد شریف خاندان کی جانب سے وزارت داخلہ کو درخواست دے دی گئی ہے۔درخواست میں نواز شریف کی طبیعت ناسازی اور بیرون ملک علاج کےلیے ڈاکٹرز کی تجویز کا تذکرہ کیا گیا۔ شریف خاندان کی جانب سے دائر کی جانے والی یہ درخواست سیکرٹری داخلہ کو موصول ہو گئی ہے۔
حکومت نے بھی نواز شریف کی درخواست پر فوری عملدرآمد کا فیصلہ کیا ہے۔جس کے بعد نواز شریف کا نام جلد ہی ای سی ایل سے نکالے جانے کا امکان ہے۔وزارت داخلہ نے نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا فیصلہ کر لیا۔
جس کے بعد نواز شریف کا جلد ہی بیرون ملک جانے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف علاج کے لیے بیرون ملک جاسکتے ہیں، اسی لیے مسلم لیگ ن کی جانب سے نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکلوانے کے لئے حکومت کو درخواست دینے پر غور کیا گیا۔ نواز شریف کے پلیٹیلٹس کا مستحکم نہ ہونا تشویشناک ہے، ڈاکٹر عدنان لندن میں نواز شریف کے معالج سے رابطہ کریں گے، غیر ملکی ڈاکٹرز کی رائے اور مشاورت کی فائل تیار کی جارہی ہے۔ جبکہ ضرورت پڑنے پر غیر ملکی ڈاکٹرز کی تجاویز پر مبنی فائل قانونی فورم پر استعمال کی جائے گی ، یہی نہیں شریف فیملی کے ہارلے اسٹریٹ کلینک کے ڈاکٹرز سے بھی ان کی صحت سے متعلق مشاورت کی جارہی ہے۔
واضح رہے کہ رواں برس اگست میں وفاقی کابینہ کے اجلاس کی روشنی میں وزارت داخلہ نے سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحب زادی مریم نواز کا نام ای سی ایل میں شامل کیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *