ڈالر مہنگا ہو کر ملکی تاریخ کی نئی بلند ترین سطح 147 روپے تک پہنچ گیا

کراچی: (پاکستان فوکس آن لائن)انٹر بینک مارکیٹ میں ڈالر مزید 4 فیصد مہنگا ہو کر 147 روپے کی سطح پر پہنچ گیا۔ انٹر بینک میں آج کاروبار کا آغاز ہوا تو ایک امریکی ڈالر 141 روپے 39 پیسے کا تھا جس کی قدر میں دیکھتے ہی دیکھتے اضافہ ہوا اور 5 روپے 61 پیسے مہنگا ہونے کے بعد 147 تک پہنچ گیا۔پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر نے اونچی اڑان بھرنا شروع کردی ہے ۔ انٹر بینک میں امریکی ڈالر پاکستانی روپے کے مقابلے میں6 روپے 61 پیسے مہنگا ہوگیا ہے۔انٹر بینک میں امریکی ڈالر کی قیمت روپے کے مقابلے میں 148 روپے ہوگئی ہے ۔ اس وقت امریکی ڈالر ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر ٹریڈ ہورہا ہے۔اوپن مارکیٹ میں ڈالر 144 روپے سے بڑھ کر 147 روپے پر پہنچ گیاہے۔انہوں نے کہا کہ انٹر بینک میں ڈالر مہنگا ہونے کے بعد اوپن مارکیٹ میں بھی ڈالر مہنگا ہواہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق روپے پر دباؤ کے باعث ڈالر مہنگا ہوا ہے ۔ پاکستان کے آئی ایم ایف سے معاہدے کے بعد ڈالر کی قیمت میں اضافے کی خبریں گردش کررہی تھیں ۔یاد رہے گزشتہ روز حکومت نے مارکیٹ سے زائد قیمت پر ڈالر فروخت کرنے والی ایکسچینج کمپنیوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کیا تھا۔بدھ کے روز ڈالر کی قیمت 146 روپے 25 پیسے کی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی تھی لیکن کرنسی مارکیٹ بند ہونے سے پہلے قیمت میں دو روپے کمی آئی۔ڈالر کی قیمت میں اچانک اتار چڑھاؤ کو دیکھتے ہوئے حکومت نے کرنسی ریٹ سے متعلق اہم اجلاس طلب کیا تھا جس کی صدارت وزیراعظم نے کی۔اجلاس میں چیئرمین ایف بھی آر، گورنر اسٹیٹ بینک اور ڈی جی ایف آئی اے بھی شریک ہوئے۔ وزیراعظم کو بتایا گیا کہ کرنسی مارکیٹ میں ڈالرکی قیمت خرید 143.50 اور قیمت فروخت 144 روپے ہے۔عمران خان نے کہا کہ کسی ایکسچینج کمپنی کو طے شدہ کرنسی ریٹ سے انحراف کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی اور ایسا کرنے والوں کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔
یاد رہے کہ آئی ایم ایف کی شرائط میں درج ہے کہ پاکستان کا مرکزی بینک ڈالر کی قیمت مارکیٹ ریٹ کے برابر طے کرے گا۔ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان بیل آؤٹ پیکیج پر اتفاق ہونے کے بعد امکان ظاہر کیا جارہا تھا کہ ڈالر کی قیمت میں اضافہ ہوگا۔ معیشتوں کی درجہ بندی کرنے والے ادارے موڈیز نے بھی پیش گوئی کر رکھی ہے کہ رواں سال کے اختتام تک پاکستان میں ڈالر کی قیمت 148 تک جا سکتی ہے۔واضح رہے پی ٹی آئی کی حکومت کے اقتدار میں آنے سے اب تک ڈالر کی قیمت میں لگ بھگ 13 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔ستمبر 2018 میں ڈالر 134 روپے پر ٹریڈ کررہا تھا اور 9 ماہ میں بڑھ کر 148 روپے پر پہنچ چکا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *