ایس او پی کی خلاف ورزی، ملک میں کئی بڑی مارکیٹیں آج بند کردی جائیں گی

پنجاب اور کے پی کے میں آپریشن شروع کر دیا گیا ہے، شہباز گل

لاہور: (پاکستان فوکس آن لائن)ملک بھر میں ایس او پیز پر عملدرآمد نہ کرنے والی بڑی مارکیٹیں بند کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا۔ پنجاب اور خیبرپختونخوا کی بڑی مارکیٹس بند کرنے کیلئے آپریشن شروع کر دیا گیا۔
تفصیلات کے مطابق حکومت نے کورونا وائرس کا پھیلاؤ روکنے کیلئے جاری کیے گئے ایس او پیز کی خلاف کرنے پر مارکیٹں بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے سیاسی روابط ڈاکٹر شہبازگل نے بتایا کہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے پر ملک بھر میں آج کئی بڑی مارکیٹیں بند کر دی جائیں گی۔شہباز گل نے بتایا کہ یہ فیصلہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر نے کیا ہے۔ پنجاب اور خیبرپختونخوا میں آپریشن شروع کر دیا گیا ہے۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والی مارکیٹوں کا بند کرنے کا فیصلہ عوام کی حفاظت کے لیے کیا گیا ہے۔
دوسری جانب چیف سیکرٹری پنجاب نے این سی او سی میں بریفنگ دیتے ہوئے کہا غیر ذمہ داری موت کا سبب بن رہی ہے۔ ایس او پیز پر عمل درآمد سے ہی کوروونا کے پھیلاؤ کو روکا جا سکتا ہے۔ پنجاب کی بڑی مارکیٹیں این سی او سی کے فیصلوں کے تناظر میں بند کی جائیں گی، انڈسٹریل ایریاز، مارکیٹس اور ٹرانسپورٹ کو پابند بنایا جائے گا، خلاف ورزی کی صورت میں جرمانے عائد کیے جائیں گے۔ادھر چیف سیکرٹری پنجاب جواد رفیق ملک کی زیر صدارت کیمپ آفس میں ہنگامی اجلاس ہوا جس میں کورونا وائرس کی روک تھام سے متعلق ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا فیصلہ کیا گیا۔ انہوں نے انتظامیہ اور پولیس کو احکامات جاری کرتے ہوئے کہا اب معافی کا وقت ختم ہوگیا، سب افسران فیلڈ میں نکلیں۔چیف سیکرٹری پنجاب نے حکم دیا کہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کی مرتکب دکانوں اور بازاروں کو فوری بند کر دیا جائے، ماسک کی پابندی کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف سخت کارروائی کی جائے، احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد یقینی بنانے کیلئے انتظامی اور پولیس افسران خود فیلڈ میں موجود رہیں۔
شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ایس او پی ایز پر عملدرآمد نہ کرنے پر پورے ملک میں کئی بڑی مارکیٹیں آج بند کر دی جائیں گی، پنجاب اور کے پی کے میں آپریشن شروع کر دیا گیا ہے، ہم سب کو ہر صورت ایس او پی ایز پر عملدرآمد کرنا ہوگا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *