اسلام آباد ہائیکورٹ،چینی انکوائری کمیشن کو 10 روز کیلئے کارروائی سے روک دیا

شوگر انکوائری کمیشن کو عام آدمی کو چینی کی سہولت فراہمی کیلئے کچھ کرنا تھا لیکن نہیں کیا، اسلام آباد ہائی کورٹ

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن) اسلام آباد ہائیکورٹ نے چینی انکوائری کمیشن کو 10 روز کے لئے کارروائی سے روک دیا۔ عدالت نے وفاق، واجد ضیا، شہزاد اکبر، سیکریٹری داخلہ اور انکوائری کمیشن ارکان کو نوٹس جاری کر دیا۔
اسلام آباد ہائیکورٹ میں چینی سکینڈل انکوائری کمیشن کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی۔ عدالت نے استفسار کیا شوگر ملز ایسوسی ایشن اور حکومت چینی 70 روپے کلو کی ذمہ داری لے، شرط منظور ہے تو آئندہ سماعت تک حکومت کو کارروائی سے روک دیتے ہیں، چینی انکوائری کمیشن رپورٹ پر کارروائی سے روک رہے ہیں۔اسلام آباد ہائیکورٹ نے حکومت سے جواب طلبی تک چینی 70 روپے کلو بیچنے کی ہدایت کر دی۔ چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے کہا حکومت سے جواب لے لیتے ہیں، اس وقت تک چینی 70 روپے میں بیچیں، عمومی طور پر ایگزیکٹو معاملات میں مداخلت نہیں کرتے، مزدور کی ضرورت چینی ہے، مشروب پر سبسڈی دی جا رہی ہے، عام آدمی کو بنیادی حقوق کیوں نہیں دے رہے ؟۔
چیف جسٹس ہائیکورٹ نے استفسار کیا کیا وفاق عدالتی آپشن کی مخالفت کرے گا ؟ جس پر ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا عدالتی آپشن کی مخالفت نہیں کریں گے۔ چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے کہا یہاں پر مفاد عامہ کا سوال سامنے آیا ہے، جس مقصد کیلئے کمیشن بنا تھا وہ پورا ہی نہیں ہوا، کمیشن کو عام آدمی کو چینی کی سہولت فراہمی کیلئے کچھ کرنا تھا لیکن نہیں کیا۔عدالت نے 10 روز کیلئے حکم امتناع جاری کرتے ہوئے نیب، ایف آئی اے، ایس ای سی پی کو ملز مالکان کے خلاف کاروائی سے روک دیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *