سابق امیر جماعت اسلامی سید منور حسن انتقال کر گئے

کراچی: (پاکستان فوکس آن لائن)جماعت اسلامی کے سابق امیر سید منور حسن طویل علالت کے بعد انتقال کرگئے وہ کئی دنوں سے علیل تھے۔ ان کی نماز جنازہ کل بروز ہفتہ بعد نماز ظہر عید گاہ گراونڈ ناظم آباد میں ادا کی جائے گی اور نماز ظہر ڈیڑھ بجے گراونڈ میں ہی ہوگی جبکہ تدفین سخی حسن قبرستان میں کی جائیگی۔سید منور حسن نے ابتدائی تعلیم جیکب لائن کے ایک اسکول سے حاصل کی جب کہ جامعہ کراچی سے عمرانیات اور اسلامیات میں”ایم اے“ کے امتحانات پاس کیے۔
سید منور حسن نے 1968 میں جماعت اسلامی میں شمولیت اختیار کی اور1977 ء میں کراچی سے قومی اسمبلی کا الیکشن لڑا اور پاکستان میں سب سے زیادہ ووٹ لے کر اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے۔ 1992 ء میں انہیں جماعت اسلامی پاکستان کا مرکزی اسسٹنٹ سیکرٹری جنرل اور پھر 1993ء میں مرکزی سیکرٹری جنرل بنا دیا گیا۔منورحسن 1977 میں کراچی سے رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئےجبکہ سید منور حسن 2009 سے 2014 تک جماعت اسلامی کے امیر رہے ۔سید منور حسن جماعت اسلامی کے چوتھے امیر تھے۔ صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی، شہباز شریف، آصف زرداری، شاہ محمود قریشی، وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی اور دیگر سیاسی و سماجی شخصیات نے سید منور حسن کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سید منور حسن کی لازوال سیاسی اور مذہبی خدمات کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔ گورنر سندھ عمران اسماعیل نے بھی سابق امیر جماعت اسلامی منور حسن کے انتقال پر اظہار افسوس کرتے ہوئے مرحوم کے درجات کی بلندی کے لئے دعا کی۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *