اسٹاک مارکیٹ میں تیزی، سرمایہ کاروں کو 220 ارب روپے کا فائدہ

کراچی: (پاکستان فوکس آن لائن)معیشت کے حوالے سے حکومتی اقدامات اور عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) سے ریلیف پیکیج کی منظوری کے بعد پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں زبردست تیزی دیکھنے میں آئی۔گزشتہ روز آئی ایم ایف کی جانب سے پاکستان کو ایک ارب 38 کروڑ ڈالرز کے ریلیف پیکیج کی منظوری دی گئی اور حکومت کی جانب سے بھی شرح سود میں دو فیصد کمی کی گئی جس کا اثر آج کاروباری ہفتے کے آخری روز مارکیٹ میں تیزی کی صورت میں دیکھنے میں آیا۔
تفصیلات کے مطابق پاکستان سٹاک مارکیٹ میں رواں ہفتے کے آخری کاروباری روز کے دوران زبردست تیزی ریکارڈ کی گئی، حصص مارکیٹ میں ٹریڈنگ کا آغاز ہی زبردست انداز میں ہوا۔ ملکی تاریخ میں پہلی بار انڈیکس 5 فیصد بڑھا تو ٹریڈنگ کو روک دیا گیا تھا۔ ٹریڈنگ کے دوران پہلے ہی گھنٹے میں 100 انڈیکس 1129.99 پوائنٹس بڑھ گیا جس کے بعد انڈیکس 32 ہزار کی نفسیاتی حد عبور کرنے کے بعد 32459.45 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔اس دوران تیزی کا تسلسل دیکھنے کو ملا اور ایک موقع پر انڈیکس 1900 پوائنٹس بڑھ گیا تھا۔ دوران ٹریڈنگ پاکستان اسٹاک مارکیٹ کا ہنڈرڈ انڈیکس 33 ہزار کی نفسیاتی حد بھی عبور کر گیا تھا اور انڈیکس 33257.15 پوائنٹس کی سطح پر بھی دیکھا گیا تھا۔ تاہم تیزی کا یہ تسلسل برقرار نہ رہ سکا۔کاروباری آخری روز کے دوران پاکستان سٹاک مارکیٹ کا اختتام 1502.37 پوائنٹس کی تیزی پر ہوا، جس کے بعد 100 انڈیکس 32831.83 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔تیزی کے باعث پاکستان سٹاک مارکیٹ میں 32 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہوئی اور انڈیکس کی 15 حدیں بھی بحال ہوئیں، بحال ہونے والی حدوں میں 31400، 31500، 31600، 31700، 31800، 31900، 32000، 32100، 32200، 32300، 32400، 32500، 32600، 32700، 32800 کی حدیں شامل ہیں۔
کاروبار کے دوران پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں پورے کاروباری روز کے دوران کاروبار میں 4.8 فیصد کی بہتری دیکھی گئی اور 20 کروڑ 14 لاکھ 25 ہزار 179 شیئرز کا لین دین ہوا جس کے باعث سرمایہ کاروں کو 220 ارب روپے سے زائد کا فائدہ ہوا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *