رواں سال مہنگائی کی شرح12فیصد رہے گی، گورنراسٹیٹ بینک

آئندہ 2 ماہ کے لیے بنیادی شرح سود 13.25 فیصد برقرار

کراچی: (پاکستان فوکس آن لائن)گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ آئندہ 2 ماہ کے لیے بنیادی شرح سود 13.25 فیصد برقرار رہے گی،جبکہ رواں سال مہنگائی کی شرح 11 سے 12 فیصد رہنے کا امکان ہے۔
گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ آئندہ 2 ماہ کے لیے شرح سود کی موجودہ سطح برقرار رہے گی،بنیادی شرح سود 13.25 فیصد برقرار رہے گی،مہنگائی کو دیکھتے ہوئے شرح سود کو برقرا ر رکھنے کا فیصلہ کیا ،رواں سال مہنگائی کی شرح 11 سے 12 فیصد رہے گی،تاہم مہنگائی کی شرح میں کمی متوقع ہے ،سپلائی کا عمل بہتر ہونے سے مہنگائی کی شرح میں کمی ہونے کی توقع ہے ۔مرکزی بینک کے اندازے توقعات کے مطابق ہیں، پاکستان کی شرح سود دیگر ممالک سے کم ہے ۔
گورنر اسٹیٹ بینک کا مزید کہنا تھا کہ رواں سال زرعی پیداوار کم ہونے کا خدشہ ہے ، مقامی مارکیٹ میں سیمنٹ کی فروخت بڑھ رہی ہے ،برآمدی شعبے کو خصوصی طور پر سپورٹ کیا جا رہا ہے ،برآمدی شعبوں کے لیے قرضوں کی حد 200 ارب روپے تک کی جا رہی ہے ،ورکنگ کیپیٹل اسکیم میں بھی 100 ارب روپے کا اضافہ کیا جا رہا ہے ،معاشی استحکام میں مزید بہتری آرہی ہے ،مہنگائی میں اضافے کی بنیادی وجوہات عبوری ہیں،اقتصادی سرگرمیوں کے فروغ سے روزگار کے مواقع بڑھیں گے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ چھوٹے برآمد کنندگان کے لیے جلد نئی سکیم کا اعلان کیا جائے گا،کاروباری برادری اور درآمدی عمل کو آسان بنایا جا رہا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *