اسٹاک مارکیٹ میں 605 پوائنٹس کی تیزی، 33 ہزار کی نفسیاتی حد بحال

اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت میں ایک روپے کا اضافہ

کراچی: (پاکستان فوکس آن لائن) پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں رواں ہفتے کے تیسرے کاروباری روز کے دوران تیزی نے ایک مرتبہ پھر واپسی کی ہے، 100 انڈیکس 605.45 پوائنٹس کی تیزی ریکارڈ کی گئی۔ بڑھوتری کے باعث 33 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہو گئی۔تفصیلات کے مطابق اسٹاک مارکیٹ میں سرمریاکاروں کی جانب سے شیئرز کی خریداری میں دلچسپی دیکھی گئی۔ بروکرز کا کہنا ہے کہ مشیر خزانہ حفیظ شیخ کی جانب سے معیشت کو سنبھالنے کے لیے مختلف مراعات سستے قرضوں کا اعلان اور آنے والے بجٹ میں عوام کو ریلیف دینے کی نوید سے سرمایاکار مارکیٹ میں سرگرم نظر آئے۔پورے کاروباری روز کے دوران کاروبار میں اُتار چڑھاؤکا سلسلہ جاری رہا، کاروبار کا اختتام 605.45 پوائنٹس کی تیزی پر ہوا جس کے بعد 100 انڈیکس 33 ہزار 158 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا۔آج کاروباری روز کے دوران کاروبار میں 1.86 فیصد بہتری دیکھی گئی اور 11 کروڑ 9 لاکھ 74 ہزار 444 شیئرز کا لین دین ہوا۔ تیزی کے باعث حصص کی مالیت میں ایک کھرب روپے سے زائد کا اضافہ ہوا۔
دوسری جانب ملک بھر میں رواں ہفتے کے تیسرے کاروباری روز کے دوران روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر ایک روپیہ مہنگا ہو گیا۔تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں رواں ہفتے کے تیسرے کاروباری روز کے دوران امریکی ڈالر کی قدر میں بڑھوتری دیکھی گئی، اوپن مارکیٹ میں آج امریکی کرنسی ایک روپیہ مہنگی ہوئی جس کے بعد روپے کے مقابلے میں ایک امریکی ڈالر کی نئی قیمت 161.50 روپے ہو گئی ہے۔دوسری طرف اوپن مارکیٹ کے برعکس انٹر بینک میں امریکی ڈالر 4 پیسے سستا ہو گیا جس کے بعد امریکی کرنسی کی نئی قیمت 161 روپے61 پیسے ہو گئی۔دیگر کرنسی کی بات کی جائے تو یورو اور برطانوی پاؤنڈز کی قدر بھی بڑھ گئی۔ یورو ایک روپیہ مہنگا ہو کر 174 روپے کی سطح پر پہنچ گیا ہے جبکہ برطانوی پاؤنڈ دو روپے مہنگا ہو گیا ہے جس کے بعد پاؤنڈ 200 روپے کی سطح عبور کرنے کے بعد 201 روپے کا ہو گیا ہے۔
مزید برآں درہم کی قیمت میں بھی 40 پیسہ کا اضافہ دیکھا گیا جس کے بعد درہم کی نئی قیمت 42.90 روپے ہو گئی ہے، جبکہ ریال کی قیمت 41.50 روپے کی سطح پر برقرار ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *