اقتصادی رابطہ کمیٹی نے پیٹرول کی قیمت میں 9 روپے اضافے کی سفارش کردی

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن) اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) نے پیٹرول کی قیمت میں 9 روپے اور ڈیزل کی قیمت میں 5 روپے فی لیٹر اضافے کی سفارش کردی۔ی سی سی کے اجلاس میں پیٹرول کی قیمت 108 روپے کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔وزیراعظم کے نئے مشیر خزانہ ڈاکٹرعبد الحفیظ شیخ کی زیرصدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی( ای سی سی) کا پہلا اجلاس ہوا جس میں پٹرول کی قیمت فی لیٹر ایک سو آٹھ روپے کرنے کی منظوری دی گئی۔اوگرہ نے پٹرول 14 روپے 37 پیسے فی لیٹر مہنگا کرنے کی سفارش کی تھی، حکومت پٹرول کی مد میں پانچ ارب روپے کا بوجھ برداشت کرے گی،ای سی سی نے ڈیزل فی لیٹر چار روپے 89 پیسے مہنگا کرنے کی منظوری دے دی، لائٹ ڈیزل کی قیمت میں چھ روپے 40 پیسے فی لیٹر اضافے کی منظوری دے دی ہے۔ لائٹ ڈیزل کی نئی قیمت 86 روپے 94 پیسے فی لیٹر ہوگی۔مٹی کے تیل کی قیمت میں سات روپے 46 پیسے فی لیٹر اضافے کی منظوری دی گئی ہے۔وزیر اعظم نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے معاملہ ای سی سی کو بھیجا تھا۔ سابق وزیرخزانہ اسد عمر کے استعفے کے بعد اقتصادی رابطہ کمیٹی کا یہ پہلا اجلاس تھا۔ اجلاس میں 18 نکاتی ایجنڈے پر غور کیا گیا۔ ای سی سی نے وزارتوں کی سپلیمنٹری گرانٹس کی بھی منظوری دے دی۔مشیر خزانہ ڈاکٹرعبد الحفیظ شیخ کی زیرصدارت ہونے والے اجلاس میں اسٹیل ملز کی بحالی کیلئے ٹرانزیکشن ایڈوائزری کنسورشیم کے تقرر اور پنجاب رینجرز کے لیے ضمنی گرانٹس کی سمری پیش کی جانی تھی۔اجلاس میں وزارت داخلہ کے لیے 3 کروڑ 72 لاکھ روپے کے اضافی فنڈز مختص کرنے کا معاملہ بھی ایجنڈے کا حصہ تھا جبکہ ایکسپلوزوز ڈیپارٹمنٹ کے لیے تکنیکی ضمنی گرانٹ اور نیشنل سیونگز آرگنائزیشن کے لیے 54 کروڑ روپے کی ضمنی گرانٹ کی سمری بھی پیش کی جانی تھی۔
آج کے اجلاس میں ایمپلائیز اولڈ ایج بینفٹس انسٹیٹیوشن( ای او بی آئی) کے رواں مالی سال کی نظرثانی شدہ بجٹ تجاویز پیش کی جانی تھیں اور جنوبی وزیرستان میں خاصہ دار فورس کے لیے تنخواہوں کی ادائیگی کا معاملہ بھی ایجنڈے میں شامل تھا۔اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں ایک ہزار انڈسٹریل اسٹچنگ یونٹس کے لیے ضمنی گرانٹس اور تھل ایسٹ، بھمبرا، تھل ویسٹ فیلڈز سے سوئی سدرن گیس کمپنی(ایس ایس جی سی) کو گیس فراہمی کا معاملہ بھی زیرغور لایا جانا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *