پیٹرول کی عدم فراہمی، اوگرا کا تین آئل مارکیٹنگ کمپنیز کو شوکاز نوٹس

ملک کے مختلف شہروں میں پیٹرول کا بحران تیسرے روز بھی جاری ہے ،شہری پٹرول کی تلاش میں خوار

کراچی : (پاکستان فوکس آن لائن) پاکستان میں تیل اور گیس کی ترسیل کے ذمہ دار ادارے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی(اوگرا) نے ملک میں پیٹرول کی قلت پیدا ہونے پر 3 کمپنیوں کو شو کاز نوٹس جاری کر دیا ہے۔ اوگرا نے کمپنیوں سے پٹرول کی قلت پر 24 گھنٹوں میں وضاحت طلب کی ہے۔
ملک کے مختلف شہروں میں پیٹرول کا بحران تیسرے روز بھی جاری ہے اور شہری پٹرول کی تلاش میں خوار ہو رہے ہیں۔کراچی سمیت ملک بھرمیں پیٹرولیم مصنوعات کی شدید قلت پیداہوگئی ہے۔ کراچی میں پیٹرول پمپس کی مجموعی تعداد 3 سوکےلگ بھگ ہے جن میں سے50 فیصد پمپس پرفیول ٹینک خشک ہوگئے ہیں۔آئل کمپنیوں کی جانب سے ایندھن کےمناسب کوٹےکی خریداری نہیں کی جارہی۔ جس سےبحران پیدا ہوگیا ہے۔ دوسری جانب پی ایس اوکا کہنا ہےکہ کمپنی کے پاس پٹرولیم پروڈکٹس کے تسلی بخش ذخائر موجود ہیں۔
اوگرا نے 3 آئل مارکیٹنگ کمپنیوں سے 24 گھنٹوں میں وضاحت طلب کرلی ہے کہ پٹرولیم مصنوعات کی قلت کیوں پیدا ہوئی۔وزارت پٹرولیم سے بھی کمپنیوں کو تیل کی فراہمی یقینی بنانے کیلئے کردار ادا کرنے کا مطالبہ کردیا ہے۔اوگرا نے 3 آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کو شوکاز نوٹس جاری کردیا ہے۔ ان کمپنیوں میں شیل پاکستان، اٹک پٹرولیم اور ٹوٹل پارکو سے 24 گھنٹوں کے اندر پٹرول و ڈیزل کی عدم فراہمی کی وجوہات طلب کی گئی ہیں اور پوچھا گیا ہے کہ پٹرول پمپس پرمطلوبہ اسٹاک کیوں نہیں رکھا گیا۔
ہائیڈرو کاربن ڈویلپمنٹ انسٹی ٹیوٹ آف پاکستان نے بھی اپنی رپورٹ میں پٹرولیم بحران سنگین ہونے کا خدشہ ظاہر کیا تھا۔ اوگرا کا کہنا ہے کہ بعض آئل مارکیٹنگ کمپنیاں مطلوبہ مقدارمیں سپلائی نہیں کررہیں۔ بحرانی کیفیت سے بچنے کیلئے کمپنیاں پٹرول و ڈیزل کی دستیابی یقینی بنائیں۔ اوگرا نے آئل کمپنیوں کو ہدایات جاری کرنے کیلئے وزارت پٹرولیم کو خط بھی لکھ دیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *