بھارت کی سابق وزیر خارجہ سشما سوراج چل بسیں

نئی دہلی: (پاکستان فوکس آن لائن)بھارت کی سابق وزیرخارجہ سشماسوراج کوکشمیر کی خوشی راس نہ آئی۔ بھارت کی سابق وزیرخارجہ اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی سینئر رہنما سشما سوراج 67 سال کی عمر میں انتقال کرگئیں۔بھارتی میڈیا کے مطابق سابق وزیر خارجہ کو دل کی تکلیف کے باعث دہلی کے مقامی اسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ دوران علاج چل بسیں۔
انتقال سے 3 گھنٹے قبل اپنی آخری ٹوئٹ میں سشما سوراج نے وزیراعظم نریندر مودی کا شکریہ ادا کیا تھا۔

اپنی ٹوئٹ میں ان کا کہنا تھا کہ میں اپنی زندگی میں اسی دن کو دیکھنے کی منتظر تھی۔ البتہ سشما سوراج نے ٹوئٹ میں یہ تذکرہ نہیں کیا کہ وہ کس بات پر مودی کی شکر گزار ہیں۔ سشما سوراج گردوں کے عارضے میں بھی مبتلا تھیں اور بیماری کی باعث انہوں نے 2019 میں لوک سبھا کا انتخاب بھی نہیں لڑا تھا۔سشما سوراج بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے پہلے دور حکومت میں وزیرخارجہ رہیں اور اس کے علاوہ وہ بھارتی ریاست نئی دہلی کی 1998 میں وزیراعلیٰ بھی رہیں اور انہیں دہلی کی پہلی خاتون وزیراعلیٰ ہونے کا اعزاز بھی حاصل تھا۔

بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے سشما سوراج کے انتقال پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی سیاست کا ایک شاندار باب ختم ہوا۔انہوں نے کہا کہ بھارت کے ایک ایسے رہنما سے محروم ہو گیا جس نے اپنی زندگی عوامی خدمت اور غریب عوام کے لیے وقف کر دی تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *