چینی فوج نے دورانِ جھڑپ کرنل سمیت 20 بھارتی فوجی مار دیئے، متعدد لاپتہ

انڈیا اور چین کی جھڑپ، ہلاک ہونے والے انڈین فوجیوں کی تعداد 20 ہوگئی

نئی دہلی: (پاکستان فوکس آن لائن)لداخ میں جاری چین بھارت کشیدگی میں ہلاک ہونے والے بھارتی فوجیوں کی تعداد 20 ہوگئی ہے۔ بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق انڈیا کی فوج کا کہنا ہے کہ پیر کی شب چینی فوج کے ساتھ وادی گلوان میں ہونے والی سرحدی جھڑپ میں شدید زخمی ہونے والے فوجیوں میں سے 17 ہلاک ہوگئے ہیں جس سے ہلاک ہونے والے اہلکاروں کی کل تعداد 20 ہوگئی ہے۔انڈیا کی فوج کے بیان کے مطابق گلوان کے علاقے میں 15 اور 16 جون کی درمیانی شب جہاں دونوں فوجوں کے درمیان جھڑپ ہوئی تھی وہاں سے اب فوجیں پیچھے ہٹ گئی ہیں۔
واضح رہے کہ بھارت طویل عرصہ سے چینی سرحد کے قریب غیر قانونی شاہراہ تعمیر کرنے کی کوشش میں ہے، چین سکیورٹی خدشات کے سبب بھارت کو کئی بار متنبہ کر چکا ہے مگر بھارت اپنی ہٹ دھرمی پر قائم ہے جس کے سبب سرحدی جھڑپوں کا نہ ختم ہونے والا سلسلہ جاری ہے۔ساڑھے تین ہزار کلومیٹر طویل سرحد پر جوہری طاقت کے حامل دونوں ملکوں کی فوجوں کے درمیان مستقل بنیادوں پر جھڑپیں ہوتی رہتی ہیں، یہاں باقاعدہ طور پر سرحد پر حد بندی نہیں کی گئی لیکن کئی دہائیوں سے یہاں ایک بھی ہلاکت نہیں ہوئی تھی۔بھارتی خبر رساں ادارے کے مطابق بھارت اور چین کے سرحد (لائن آف ایکچول کنٹرول) پر 45 سال میں پہلی بار ہلاکت ہوئی ہے، چین کی پیپلز لبریشن آرمی نے کرنل سمیت 20 جوانوں کو مارڈالا۔
بھارتی خبر رساں ادارے انڈیا ٹوڈے کے مطابق پہلے کہا جا رہا تھا کہ حملے میں تین فوجی مارے گئے تاہم یہ تعداد 20 ہے، یہ تعداد بڑھ بھی سکتی ہے۔ لڑائی کے بعد تاحال متعدد فوجی لاپتہ ہیں۔بھارتی فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ اپنے فرائض کی انجام دہی کے دوران زخمی ہونے والے 17 مزید فوجی انتہائی اونچائی پر شدید ٹھنڈ کی وجہ سے زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگئے جس کے بعد مرنے والے فوجیوں کی تعداد 20 ہو گئی ہے۔بھارتی خبر رساں ادارے کے مطابق دونوں ممالک کی فوجیوں کی لڑائی کے بعد چینی لڑاکا ہیلی کاپٹرز نے لائن آف ایکچول کنٹرول (ایل اے سی) پر پروازیں شروع کر دی ہیں۔ جس کے بعد دونوں ممالک میں حالات کشیدہ ہونے کا خطرہ ہے۔

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *