tapmadnews30nov

کاون ہاتھی کو خصوصی پرواز کے ذریعے کمبوڈیا بھجوادیا گیا
کاون کے ہمراہ 8 ٹیکنیکل اور 2ڈاکٹرز پر مشتمل غیرملکیوں کی 10 رکنی ٹیم بھی کمبوڈیا گئی ہے
دنیا کے سب سے تنہا ہاتھی قرار دیئے گئے ’کاون‘ کو خصوصی پرواز کے ذریعے بالآخر کمبوڈیا روانہ کردیا گیا ہے۔نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے حکم پر اسلام آباد چڑیا گھر سے رہائی پانے والے کاون ہاتھی کو روسی ساختہ خصوصی طیارے کے ذریعے پیر کی صبح براستہ نئی دہلی بالآخر کمبوڈیا روانہ کردیا گیا ہے۔ کاون کے ہمراہ 8 ٹیکنیکل اور 2 ڈاکٹرز پر مشتمل غیرملکیوں کی 10 رکنی ٹیم بھی کمبوڈیا گئی ہے۔کاون کو خصوصی کنٹینر میں اسلام آباد ائیرپورٹ لایا گیا تھا جہاں کرین کی مدد سے اسے جہاز میں لوڈ کیا گیا، کاون کو گزشتہ شب 8 بجے روانہ کیا جانا تھا لیکن بھارت کی جانب سے طیارے کا اجازت نہ ملنے پر کاون ہاتھی کی روانگی میں تاخیر ہوئی۔واضح رہے ’کاون‘ 1981 میں سری لنکا میں پیدا ہوا۔ 1985 میں سری لنکن حکومت نے اسے پاکستان کو تحفے میں دیا تھا ۔ تب سے وہ اسلام آباد کے چڑیا گھر میں ہی تھا۔ 1991 میں بنگلا دیش نے پاکستان کو ایک ہتھنی تحفے میں دی جس کا نام ’سہیلی‘ رکھا گیا۔ 2012 میں سہیلی کے مر جانے کے بعد ’کاون‘ دن بدن ذہنی دباؤ کا شکار ہوتا چلا گیا، ایک وقت ایسا آیا جب وہ اپنا سر ایک سے دوسری جانب ہلاتا رہتا یا دیواروں اور درختوں سے سر ٹکراتا۔2016 میں سینیٹ کی کمیٹی نے کاون کو کسی محفوظ مقام پر منتقل کرنے کا حکم دیا گیا لیکن متعلقہ حکام کی جانب سے پس و پیش کی گئی، معاملہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں گیا جہاں سے آنے والے حکم پر کاون کو بالآخر کمبوڈیا روانہ کردیا گیا جہاں وہ اپنی باقی کی زندگی دوسرے ہاتھیوں کے ساتھ گزارے گا۔

 

ایم کیو ایم کے رہنما عادل صدیقی کورونا کے باعث انتقال کر گئے
متحدہ قومی موومنٹ(ایم کیو ایم) کے سابق ایم پی اے عادل صدیقی کورونا وائرس کے باعث انتقال کرگئے۔تفصیلات کے مطابق متحدہ قومی موومنٹ(ایم کیو ایم) کے سابق ایم پی اےعادل صدیقی کی حالت کورونا کے باعث تشویشناک تھی اور وہ ہسپتال میں زیر علاج تھے،تاہم آج ایم کیوایم کے سابق ایم پی اے عادل صدیقی کورونا وائرس کے باعث انتقال کر گئے،عادل صدیقی کی عمر 57سال تھی۔عادل صدیقی 1963میں کراچی میں پیدا ہوئے اور جامعہ کراچی سے گریجویشن کیا جبکہ عادل صدیقی 2002سے 2007تک صوبائی وزیر رہے،عادل صدیقی 2008 کی صوبائی حکومت میں بھی صوبائی وزیر رہےجبکہ 2013سے 2018تک بھی حلقہ پی ایس 100ممبر صوبائی اسمبلی رہے،عادل صدیقی 2016سے دبئی میں خودساختہ جلاوطنی کاٹ رہے تھے اور چند روز قبل ہی وطن واپس آئے تھے۔خیال رہے کہ عادل صدیقی کووڈ میں مبتلا ہونے سے قبل کئی برس سے پھیپھڑوں اور دیگر عارضوں میں مبتلا تھے،مختلف بیماریوں کے باعث عادل صدیقی ملک اور بیرون ملک سفر میں ڈاکٹر اور آکسیجن سلینڈر ساتھ رکھتے تھے۔واضح رہے کہ کورونا کی دوسری لہر کے آغاز سے کیسز میں ہرگزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے اور اب تک کئی اہم شخصیات وائرس میں مبتلا ہوچکی ہیں ، وزیراعلی ٰ سندھ مراد علی شاہ، ایم کیو ایم رہنما فاروق ستار کا کورونا ٹیسٹ مثبت آیا تھا، اس سے قبل گلگت بلتستان انتخابی مہم پر موجود پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنما اور سابق وزیراعظم نواز شریف کے داماد کیپٹن (ر) صفدر اورپی پی پی سینئر رہنما قمر زمان کائرہ میں بھی کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی تھی۔وفاقی وزیرعلی زیدی، مسلم لیگ ن رہنما شہبازشریف ، مصدق ملک ،سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی ، حمزہ شہباز، مریم اورنگزیب ، مولابخش چانڈیو بھی کورونا سے صحتیاب ہوچکے ہیں ۔علاوہ ازیں فنکشنل لیگ کے جادم منگریو، پی پی رکن سندھ اسمبلی جام مدد علی اور چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ جسٹس وقار سیٹھ کورونا سے انتقال کرگئے۔

 

ملتان میں پی ڈی ایم جلسہ، اپوزیشن اور حکومت آمنے سامنے
پی ڈی ایم کا آج اسٹیڈیم میں ہر صورت جلسے کا اعلان، حکومت بھی ایکشن کیلئے تیار
پی ڈی ایم نے آج قاسم باغ اسٹیڈیم میں ہر صورت جلسہ کرنے کا اعلان کر دیا ہے، دوسری طرف صوبائی حکومت نے بھی جلسہ روکنے کے لیے تیاری کر لی۔ قاسم باغ اسٹیڈیم میں آج پی ڈی ایم جلسے کے سلسلے میں اپوزیشن جماعتیں اور حکومت آمنے سامنے ہیں۔تفصیلات کے مطابق اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پی ڈی ایم نے آج ملتان کے قاسم باغ اسٹیڈیم میں جلسے کا اعلان کررکھا ہے جب کہ حکومت نے کورونا کے پیش نظر جلسہ نہ ہونے دینے کا تہیہ کررکھا ہے۔ قاسم باغ اسٹیڈیم کے دروازوں پر تالے ہیں، اس لئے قاسم باغ میں جلسے کا کوئی انتظام نہیں ہوسکا، اسٹیڈیم سے پی ڈی ایم جماعتوں کے جھنڈے اور بینرز بھی اتار دئیے گئے ہیں۔قاسم باغ اسٹیڈیم اطراف کے علاقوں میں پولیس کی بھاری نفری تعینات ہے۔ شہر کے بیشتر مقامات پر کنٹینر لگا کر سڑکوں کو بند کردیا گیا ہے جس سے عام شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ مختلف علاقوں میں موبائل فون اور انٹرنیٹ سروس بھی معطل ہے۔اپوزیشن کے کارکنوں کو روکنے کے لیے ملتان کے داخلہ اور خارجی راستوں پر بھی پولیس کی بھاری نفری تعینات ہے، دیگر شہروں سے ملتان کے لئے بسیں بک کرنے پربھی پابندی لگادی گئی ہے۔ اس کے علاوہ ملتان اور گرد و نوح کے علاقوں میں بھی بڑے پیمانے پر سیاسی کارکنوں کی پکڑ دھکڑ ہوئی ہے۔ اس کے علاوہ پولیس کی اضافی نفری، آنسو گیس شیل اور ربڑ کی گولیاں بھی منگوا لی گئی ہیں۔دوسری جانب اپوزیشن کی جانب سے کہا گیا ہے کہ آج ملتان کا جلسہ ہر حال میں ہوگا۔ اس حوالے سے اپوزیشن جماعتوں نے حکمت عملی بھی تیار کرلی ہے۔بلاول بھٹو زرداری کے کورونا کا شکار ہونے کے باعث بے نظیر بھٹو کی سب سے چھوٹی بیٹی آصفہ بھٹو زرداری بھی آج سے قومی سیاست میں انٹری دے رہی ہیں، وہ یوسف رضا گیلانی کی رہائش گاہ پر موجود ہیں۔ادھر مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ جلسہ ناکام بنانے کے لیے حکومت غیر قانونی راستے اختیار کررہی ہے، ووٹ چور ٹولہ جلسے روکنے کے لئے سرتوڑ کوشش کررہا ہے لیکن لوگ حکومت کے خلاف اپنا فیصلہ سنا چکے ہیں۔ آج کا جلسہ ہوکر رہے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *