نیشنل ایکشن پلان: اب تک 121 افراد کو حفاظتی تحویل میں لیا گیا، وزارتِ داخلہ

اسلام آباد: (مانیٹرنگ ڈیسک)نیشنل ایکشن پلان کے تحت 121 افراد کو اب تک حفاظتی تحویل میں لے لیا گیا۔ وزارتِ داخلہ کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق نیشنل ایکشن پلان کے تحت صوبائی حکومتوں نے 182 مدارس، 34 سکولوں اور 5 کالجوں کو اپنی تحویل میں لیا ہے۔اس کے علاوہ صوبائی حکومتوں نے 163 ڈسپنسریوں، 184 ایمبولینسز اور8 دفاتر کو بھی اپنی تحویل میں لیا ہے۔نیشنل ایکشن پلان کے تحت سندھ میں56 مدارس، اسکولزکو سرکاری تحویل میں لے لیاگیا،محکمہ داخلہ سندھ نے نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے، نوٹیفکیشن کے مطابق تمام ادارے محکمہ اوقاف کے زیرانتظام چلائے جائیں گے۔ادارے کراچی،حیدرآباد،مٹیاری،جامشورواوردیگرشہروں میں ہیں ،نوٹیفکیشن کے مطابق تمام اداروں کوعام شہریوں کیلئے چلایاجائے گااوررکاوٹ ڈالنے والوں کیخلاف قانونی کارروائی ہوگی۔سی ٹی ڈی اورحساس اداروں کادیگرشہروں میں بھی آپریشن جاری ہے جبکہ نیشنل ایکشن پلان کے تحت لاہور میں کارروائی میں کالعدم تنظیموں کے 11 افرادکو گرفتارکر لیاگیا۔وزارت داخلہ کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ کالعدم تنظیموں کےخلاف آپریشن نیشنل ایکشن پلان کے تحت جاری ہے، وزارت داخلہ صوبائی حکومتوں اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کےساتھ رابطے میں ہے۔واضح رہے کہ نیشنل ایکشن پلان کے تحت کالعدم تنظیم جیشِ محمد کے سربراہ مولانا مسعود اظہر کے بھائی مفتی عبدالرؤف اور بیٹے حماد اظہر کو بھی حفاظتی تحویل میں لیا گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *