جعلی اکاؤنٹس کیس: زرداری، فریال اور دیگر کی استثنیٰ درخواست مسترد

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن) جعلی اکاؤنٹس کیس میں احتساب عدالت نے آصف زرداری، فریال تالپور اور دیگر ملزمان کی حاضری سے استثنیٰ کی درخواست مسترد کر دی۔ عدالت نے تمام ملزمان کو 16 اپریل کو دوبارہ پیش ہونے کا حکم دے دیا۔ احتساب عدالت کے جج ارشد ملک نے جعلی اکاؤنٹس ریفرنس پر سماعت کی۔ سابق صدر آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور عدالت میں پیش ہوئے۔ 2 خواتین ملزمان نے گواہ بننے کی درخواست دائر کی، کرن اور نورین نامی 2 خواتین نے گواہ بننے کی درخواست دائر کی جس میں کہا گیا کہ ہمارا نام ملزمان میں ہے لیکن ہم گواہی دینے کو تیار ہیں، ہم نے چئیرمین نیب کو بھی درخوست لکھی ہے۔ جج ارشد ملک نے کہا کیا آپ وعدہ معاف گواہ بنیں گی ؟ دیگر ملزمان کے وکلا نے مخالفت کرتے ہوئے یہ کوئی سٹیج نہیں ہے وعدہ معاف گواہ بننے کا۔جج ارشد ملک نے نیب پراسیکیوٹر سے استفسار کرتے ہوئے کہا خواتین کی درخواست پر آپ کیا کہتے ہیں ؟ جس پر سردار مظفر نے کہا ہمیں چیک کرنا ہو گا کہ کوئی درخواست نیب میں ہے یا نہیں۔ عدالت نے خواتین ملزمان سے الگ الگ تحریری درخواستیں جمع کرانے کی ہدایت کر دی۔قبل ازیں پیشی کے موقع پر سکیورٹی کے خصوصی انتظامات کئے گئے۔ عدالت نے آصف زرداری سمیت تمام 24 ملزمان کو طلب کر رکھا تھا۔ ملزمان میں فریال تالپور، حسین لوائی، طحہ رضا، انور مجید، عبدالغنی مجید، زین ملک، نمر مجید، علی کمال مجید، مصطفی ذوالقرنین، عدیل شاہ، قاسم، اشرف، اقبال نوری، داؤد، شیر محمد، شہزاد، کرن امین، نورین سلطان، ناصر شیخ، کرسٹوفر ڈی کروز، غضنفر احسن، راحیل مبین اور اسلم مسعود شامل ہیں۔ جعلی اکاؤنٹس کیس کراچی کی بینکنگ کورٹ سے احتساب عدالت اسلام آباد کو منتقل ہوا تھا۔ادھر میڈیا رپورٹس کے مطابق زرداری نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں جواب جمع کرانے کے لیے نیب سے مہلت مانگ لی۔وکلا کی جانب سے 2 ہفتوں کی مہلت دینے کا خط نیب کو موصول ہوا ہے جس میں 17 اپریل تک کی مہلت مانگی گئی ہے۔ نیب ذرائع کے مطابق مہلت کا ابھی کوئی فیصلہ نہیں ہوا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *