بابو سر ٹاپ حادثے میں 26افراد جاں بحق، پاک فوج کے 10 جوان بھی شامل

چلاس: (پاکستان فوکس آن لائن)ا سکردو سے پنڈی جانے والی تیزرفتار مسافر کوچ کو چلاس کے قریب حادثہ پیش آ گیا، بےقابو ہو کر چٹان سے ٹکرا گئی، حادثے کے نتیجے میں 10 فوجی جوانوںسمیت 26 افراد جاں بحق اور 11 زخمی ہو گئے۔ پاک فوج نے بابو سرٹاپ پر ریسکیو آپریشن کرتے ہوئے لاشوں اور زخمیوں‌ کو سی ایم ایچ گلگت منتقل کر دیا۔
راولپنڈی جانے والی بس چلاس کےقریب حادثے کا شکار ہو گئی تھی۔ تیز رفتاری کےسبب ڈرائیور بس کا کنٹرول کھو بیٹھا اور بس چٹان سے ٹکرا گئی جس کے سبب 26 افراد جاں بحق اور 11 زخمی ہو گئے۔ بس سکردو سے روانہ ہوئی تھیل۔ زخمیوں میں بچے اور خواتیں بھی شامل ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ بس مسافروں سے کھچا کھچ بھری ہوئی تھی کہ بابوسر ٹاپ کے علاقے میں حادثے کا شکار ہو گئی۔
آئی ایس پی آر کے مطابق چلاس بس حادثے میں 26 مسافر جاں بحق ہوگئے جن میں سے 10 کا تعلق پاک فوج سے ہے۔ آرمی ایوی ایشن کے ہیلی کاپٹروں کے ذریعے 26 لاشوں اور زخمیوں کو سی ایم ایچ گلگت منتقل کر دیا گیا۔ حادثہ بابو سر ٹاپ کے مقام پر پیش آیا
پاک فوج نے بابو سر سٹاپ بس حادثے کے مقام پر ریسکیو آپریشن مکمل کرلیا،حادثے میں 26 مسافر جاں بحق اور12 متعددزخمی ہوئے،جاں بحق ہونے والوں میں پاک فوج کے 10 جوان بھی شامل ہیں۔پاک فوج کے تعلقات عامہ کے شعبے آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج نے بابو سر سٹاپ بس حادثے کے مقام پر ریسکیو آپریشن مکمل کرلیا ہے،پاک فوج نے ہیلی کاپٹرز کے ذریعے زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا،پاک فوج کے ہیلی کاپٹرسے زخمیوں کو سی ایم ایچ گلگت منتقل کردیاگیا، آئی ایس پی آر کے مطابق 26 میتیں بھی سی ایم ایچ گلگت منتقل کردی گئی ،جاں بحق ہونے والوں میں پاک فوج کے 10 جوان بھی شامل ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *