قومی اسمبلی اجلاس، اپوزیشن نے بجٹ مسترد کردیا

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن) قومی اسمبلی کے بجٹ اجلاس کے دوران قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے آئندہ مالی سال کے بجٹ کو عوام دشمن قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا۔اسپیکر اسد قیصر کی زیر صدارت قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران شہباز شریف نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت کا بجٹ آئی ایم ایف کا بجٹ ہے جسے مسترد کرتے ہیں۔شہباز شریف نے کہا کہ پی ٹی آئی تیسرے مہینے آئی ایم ایف کے پاس جائے گی کہ ہدف پورے نہ کرسکے، پھر قومی سطح پر سمجھوتے ہوں گے جس سے پاکستان کی معیشت اور خراب ہوگی۔قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ بجٹ ظلم کی تلوار ہے جو عام آدمی کی گردن کاٹنے اور کسان کی روزی چھیننے آیا ہے، عوام کی بھلائی کیلئے بجٹ ہوتا تو پانچ چیزیں ضروری تھیں، اس میں سب سے پہلے ملازمتیں ہونی چاہییں تھیں، مہنگائی کو دو یا ڈیڑھ فیصد پر لاتے۔شہباز شریف نے کہا کہ آئی ایم ایف نے وینز ویلا کا بھٹا بٹھا دیا، پاکستان کا بجٹ بھی آئی ایم ایف نے بنایا ہے۔
شہباز شریف نے کہا کہ 4 دن ہاؤس کا وقت ضائع کیا گیا، بجٹ سیشن اہم ترین موقع ہے، ایوان میں موجود لوگ عوام سے ووٹ لے کر آئے ہیں لہذا اسپیکر قومی اسمبلی کےکندھوں پر بھاری ذمہ داری ہے، کل بھی آپ سے پروڈکشن آرڈرز جاری کرنے کی درخواست کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری، سعد رفیق اور محسن داوڑ ایوان کے ممبر ہیں، ان کے پروڈکشن آرڈرز جاری کیے جائیں، اراکین لاکھوں ووٹ لے کر عوام کے جذبات کی ترجمانی کے لیے آتے ہیں، اراکین کی حاضری یقینی بنانا اسپیکر کی ذمہ داری ہے۔ قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا کہ2013 میں عوام کی ووٹوں سے ن لیگ حکومت میں آئی تاہم اقتدار سنبھالتے ہی سر منڈواتے ہی اولے پڑے، جب حکومت ملی بجلی20،20گھنٹے جاتی تھی، جذبات میں آکر کہا 6 مہینے میں بجلی کا بحران ختم کر دیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی نے ہمارے خلاف بدترین سازش کا جال بنا تاہم ہم نے نہایت تحمل و برداشت سے اس وقت کو گزارا، چینی صدر نے ستمبر 2014 میں تشریف لانا تھا، پی ٹی آئی رہنماؤں سے کہا 3 دن کے لیے ڈی چوک سے اٹھ جائیں، پی ٹی آئی کی وجہ سےچینی صدر نے دورہ ملتوی کردیا تاہم دہشت گردی،معیشت کی بہتری کیلئے چین ہماری مدد کو آیا، پی ٹی آئی نے چینی صدر کا دورہ ملتوی کراکےملک دشمنی کا ثبوت دیا۔
چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے بھی اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ 4 ارکان کے پروڈکشن آرڈر جاری نہیں کیے جارہے، ہم روز پروڈکشن آرڈرز کا مطالبہ کرتے ہیں، ہماری توقعات اسپیکر کی کرسی سے پوری نہیں ہورہی ہیں، آپ اسیر ارکان کے پروڈکشن آرڈرز جاری کریں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *