شاہ محمود قریشی کے سرکاری میٹنگ میں شرکت کے اعتراض پر جہانگیر ترین بھی میدان میں آ گئے ، جواب جاری کر دیا

جہانگیر ترین بیک گراونڈ میں رہ کر پارٹی کو تجویز دیں: شاہ محمود قریشی

لاہور:(پاکستان فوکس آن لائن) شاہ محمود کا کہنا ہے جہانگیر ترین بیک گراونڈ میں رہ کر پارٹی کو تجویز دیں، وزرا اور افسران باہر آکر باتیں کرتے ہیں۔ شاہ محمود قریشی نے جہانگیر ترین کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ جب آپ سرکاری میٹنگز میں بیٹھتے ہیں تو مخالفین کو موقع ملتا ہے، جہانگیر ترین تجاویز دیں لیکن بیک ڈور پر رہ کر، میں صرف درخواست کر سکتا ہوں، فیصلہ آپ نے کرنا ہے، اصول کی بات کر رہا ہوں، کسی کی ذات پر نہیں۔وفاقی وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ ن لیگ اور پیپلزپارٹی صرف نعرے لگاتی ہیں، دونوں جماعتوں نے ضمنی انتخاب کیلئے اتحاد بھی کیا، اس کے باوجود عوام نے انھیں مسترد کر دیا۔ انہوں نے دعوی کیا کہ یوسف رضا گیلانی کے بچے نیا فیصلہ کرنے والے ہیں، وہ اب ن لیگ کی طرف جا رہے ہیں۔شاہ محمود نے کہا ن لیگ اور پیپلزپارٹی اخلاقی دیوالیہ پن کا شکار ہیں، 7 ماہ میں دونوں جماعتوں کے نظریئے تبدیل ہو گئے۔ جہانگیر ترین سرکاری میٹنگزمیں بیٹھتے ہیں تو مخالفین کو موقع ملتا ہے۔

شاہ محمود سمیت کوئی بھی ملک کی خدمت سے روک نہیں سکتا: جہانگیر ترین

دوسری جانب وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے سرکاری میٹنگز میں شرکت پر اعتراض کے بعد جہانگیر ترین بھی میدان میں آ گئے ہیں اور جواب جاری کر دیا ہے ۔جہانگیر ترین کا کہنا ہے جہاں جاتا ہوں وزیر اعظم کی خواہش پر جاتا ہوں، شاہ محمود سمیت کوئی بھی ملک کی خدمت سے روک نہیں سکتا۔شاہ محمود قریشی کے اعتراض پر جہانگیر ترین نے ردعمل دیتے ہوئے کہا سیاسی معاملات کے حوالے سے صرف وزیر اعظم کو جوابدہ ہوں، پاکستان کی خدمت میرا حق ہے اور اس حق کو کوئی بھی مجھ سے چھین نہیں سکتا۔قبل ازیں پی ٹی آئی رہنما شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا جہانگیرترین سرکاری میٹنگز میں بیٹھتے ہیں تو مخالفین کو موقع ملتا ہے، جہانگیر ترین سے درخواست کرسکتا ہوں، فیصلہ آپ نے کرنا ہے، جہانگیر ترین تجاویز دیں لیکن بیک ڈور پر رہ کر، اصول کی بات کر رہا ہوں، کسی کی ذات پر نہیں، جب آپ سامنے آتے ہیں تو سوال اٹھتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *