بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو دوسری بار قونصلر رسائی دیدی گئی

بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو سے بھارت کے ناظم الامور گورو اہلووالیا نے ملاقات کی

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن)بھارت نے پاکستان کی جانب سے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی فراہم کرنے کی پیشکش قبول کرلی۔اسلام آباد میں بھارتی ناظم الامور گورو آہلووالیا دفتر خارجہ پہنچے اور بھارتی اور پاکستانی سفارتی حکام نے کلبھوشن یادیو کو فراہم کی جانے والی قونصلر رسائی کی تفصیلات طے کیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق بھارت کے ناظم الامور گورو آہلووالیا کلبھوشن یادیو سے ملاقات کررہے ہیں، قونصلر رسائی اسلام آباد میں محفوظ مقام پر دی گئی ہے اور قونصلر ملاقات کیلئے کلبھوشن کی موجودگی کے مقام کو خفیہ رکھا گیا ہے۔نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کلبھوشن یادیو کی موجودگی کے مقام کو سب جیل قرار دیا گیا ہے، کلبھوشن قونصلر ملاقات میں نظرثانی پٹیشن پر دستخط کرے گا۔
خیال رہے کہ اس سے قبل 2 ستمبر 2019 کو بھی بھارتی قونصلر نے دہشت گردی کے الزام میں گرفتار بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو سے ملاقات کی تھی۔پاکستان کی جانب سے کلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کے تحت دی گئی تھی اور اس وقت کے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر گورو آہلو والیا نے کلبھوشن سے ملاقات کی تھی جو دن 12 بجے شروع ہوئی اور دو گھنٹے تک جاری رہی، ملاقات میں پاکستانی حکام بھی موجود تھے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *