ای سی سی نے روٹی کی پرانی قیمتیں بحال کرنے کی منظوری دیدی

اسلام آباد: (پاکستان فوکس آن لائن)اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی ) نے عام عوام کو تندوروں پر سستی روٹی کی فراہمی کیلئے ڈیڑھ ارب روپے کی سبسڈی کی منظوری دیدی ہے۔
ای سی سی نے نان اور روٹی کی 30 جون والی قیمت بحال کرنے کے اقدامات کی منظوری دیدی ہے۔مشیر خزانہ حفیظ شیخ کی زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں صوبائی حکومتوں کو نان اور روٹی کی قیمت 30 جون کی سطح پر بحال کرنے کی ہدایات جاری کی گئی ہے، نان کمرشل تنور کے لیے گیس ٹیرف بھی 30 جون کی سطح پر بحال کیا گیا ہے جب کہ حکومت تنور کے گیس کنکشن کے لیے ایک ارب 51 کروڑ روپے کی سبسڈی دے گی۔
اقتصادی رابطہ کمیٹی کو آگاہ کیا گیا کہ گیس کے نئے نرخوں سے روٹی کی قیمت میں 25پیسے کا اضافہ ہونا تھا مگرتندور مالکان نے روٹی کی قیمت میں زیادہ اضافہ کیا۔ ای سی سی نے ہدایت کی کہ گیس کمپنیاں کمرشل اور نان کمرشل تندوروں کا سروے کریں ،سستی گیس صرف نان کمرشل تندوروں کو ہی دی جائے گی۔ای سی سی نے نان کمرشل تنور کے لیے گیس ٹیرف 30جون کی سطح پر بحال کرنے کی ہدایت کردی ہے۔ صوبائی حکومتوں کو نان اور روٹی کی قیمت 30جون کی سطح پر بحال کرنے کی ہدایات جاری کرنے کا فیصلہ بھی کیا گیاہے۔ ای سی سی کی طرف سے کہا گیاہے کہ قیمتیں بحال نہ کیں تو حکومت سبسڈی واپس لے لے گی۔
ای سی سی کو بریفنگ میں بتایا گیاہے کہ گندم کی برآمد پر پابندی لگنے سے قیمت میں 50سے60روپے فی من کمی ہوئی ہے۔ضرورت پڑنے کی صورت میں پاسکو اپنے اسٹاک سے مارکیٹ میں گندم فراہم کرئے گا، 8اگست کونیشنل پرائس مانیٹرنگ کمیٹی کا اجلاس بلانے کا فیصلہ بھی کیا گیاہے۔
واضح رہے کہ گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے ای سی سی کو نان اور روٹی کی قیمتوں کو پرانی سطح پر لانے کے لیے اقدامات کی ہدایت کی تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *