پاک آرمی میرٹ پر یقین رکھتی ہے، میرا تقرر اس کا منہ بولتا ثبوت ہے، لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر

پاکستان میں خواتین کو عزت دی جاتی ہے،پہلی خاتون لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہرکا بی بی سی کوخصوصی انٹرویو

راولپنڈی: (پاکستان فوکس آن لائن)مسلم دنیا سمیت جنوبی ایشیاء میں لیفٹیننٹ جنرل کے عہدے پر ترقی پانے والی پہلی خاتون آرمی آفیسر لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر کہتی ہیں کہ محنت، لگن اور جذبے کے ساتھ ترقی اور کامیابی کے زینے طے کرنا مشکل نہیں ہے۔برطانوی نشریاتی ادارے ‘’بی بی سی’’ نے پہلی خاتون لیفٹیننٹ جنرل اور سرجن جنرل نگار جوہر کی تعیناتی کے حوالے سے رپورٹ کیا ہے کہ ایک ایسا معاشرہ، جہاں مرد اہم عہدوں پر تعینات ہیں، ان کا تقرر زبردست امر ہے۔خصوصی انٹرویو میں جب بی بی سی کی نمائندہ نے سوال کیا کہ کیا اس مقام پر پہنچنا مشکل نہیں تھا؟ جس پر لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر کہتی ہیں کہ پاکستان آرمی میرٹ پر یقین رکھتی ہے، اگر آپ اچھا کام کریں گے تو آپ کے لئے کسی بھی منزل پر پہنچنا مشکل نہیں ہے۔لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر کا کہنا تھا کہ ترقی اور کامیابی کیلئے لگن اور محنت درکار ہوتی ہے، اگر آپ یہ کریں تو صنف کا کوئی مسئلہ نہیں، خواتین پاکستان میں کمیونیکیشن اور انفارمیشن ٹیکنالوجی سمیت ہر شعبے میں اپنے جوہر دکھا رہی ہیں۔لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر نے مزید کہا کہ پاکستان میں خواتین کو عزت دی جاتی ہے اور انھیں ایک مقام حاصل ہے۔ ایک سوال پر لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر نے جواب دیا کہ ہمیں یہاں (پاکستان میں) ہر طرح کا تحفظ حاصل ہے۔ان کا کہنا تھا کہ مجھے پاکستان آرمی جوائن کرنے پر فخر ہے۔ آرمی میرٹ پر یقین رکھتی ہے، میرا تقرر اس کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ سرجن جنرل پاکستان آرمی لیفٹیننٹ جنرل نگار جوہر نے کورونا وائرس کے حوالے سے کہا کہ اس وبا کے خلاف حکومت کے ساتھ مل کر عوام کے ہر ممکن تحفظ کیلئے کام کر رہے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *